مرجع عالی قدر اقای سید علی حسینی سیستانی کے دفتر کی رسمی سائٹ

سوال و جواب » مشغلہ

۱۱ سوال: کمپیوٹر گیمز سے حاصل ہونے والی آمدنی کا کیا حکم ہے؟
جواب: گوڑھ سواری اور تیر اندازی کے علاوہ، جوئے اور شرط بندی کے ذریعہ سے کی جانے والی کمائی حرام ہے ۔
۱۲ سوال: کیا عورتوں کے لیے اقتصادی مشغلے اور کام جایز ہیں؟
جواب: شرعی قوانین اور حدود کی رعایت کے ساتھ جایز ہے۔
۱۳ سوال: اگر کسی سرکاری ملازم کا طویل ٹرانسفر کسی دوسرے ملک ہو جائے اور اسے وہاں کوئی کام مل جائے تو کیا وہ ایک وقت میں دو جگہ کام کرکے تنخواہ لے سکتا ہے؟
جواب: اگر دونوں ملکوں کے قانون کے خلاف نہ ہو تو کوئی حرج نہیں ہے۔
۱۴ سوال: روز عاشورا کام کرنا حرام ہے یا مکروہ؟
جواب: عاشورا کے روز کام اور کمائی کرنا مکروہ ہے بلکہ بعض حالات میں اگر عزاداری کی توہین کا باعث ہو تو جایز نہیں ہے۔
۱۵ سوال: فارمیسیسٹ (دوا بنانے والی) کی ماہر مسلمان عورت کے لیے میڈیکل اسٹور پر کام کرنے کا حکم ہے؟
جواب: حجاب اور شریعت کے احکام کی پابندی کے ساتھ حرج نہیں ہے۔
۱۶ سوال: ایسے شخص کے لیے کیا حکم ہے جو غیر اسلامی ملک میں ایسیے رسٹورینٹ پر کام کرتا ہے جہاں غیر مسلمان سور کا گوشت بھی استعمال کرتے ہیں؟
جواب: کام کرنے میں کوئی قباحت نہیں ہے مگر احتیاط واجب کی بناء پر اسے سور کا گوشت لوگوں کے سامنے کھانے کے لیے پیش نہیں کرنا چاہیے۔
۱۷ سوال: کسی ایسی دکان پر جہاں برھنہ و نیم برھنہ مجلہ بکتے یا چھپتے ہوں، کام کرنے کا کیا حکم ہے؟ ایسے مجلوں کی خرید و فروخت اور ان کے نشر و اشاعت کا کیا حکم ہے؟
جواب: مذکورہ سارے کام حرام ہیں، اس لیے کہ ان سے حرام اور برائیوں کی ترویج ہوتی ہے۔
۱۸ سوال: بعض بیوٹی پالرز لکھتے ہیں کہ انہیں بیوٹیشین کی ضرورت ہے، کیا ایک مسلمان لڑکی کسی ایسی جگہ پر کام کر سکتی ہے جہاں بے حجاب و با حجاب مسلمان و غیر مسلمان عورتیں آکر میکپ کرتی ہیں اور خود کو بازار میں ظاہر کرتی ہیں؟
جواب: بذات کود حرج نہیں ہے۔
ایک نیا سوال بھیجنے کے لیے یہاں کلک کریں
العربية فارسی اردو English Azərbaycan Türkçe Français