مرجع عالی قدر اقای سید علی حسینی سیستانی کے دفتر کی رسمی سائٹ

سوال و جواب » استخارہ

۱ سوال: کیا شادی کے لیے استخارہ کی ضرورت ہے؟
جواب: استخارہ عام طور پر شک اور فیصلہ نہ کر پانے کی صورت میں کیا جاتا ہے، وہ بھی مشورت کے بعد ۔
۲ سوال: ۱۔ آج کل جس طرح سے استخارہ رائج ہے کیا وہ شرعا صحیح ہے؟ کیا اس کو دہرانے میں کوئی حرج ہے اور اگر صدقہ کے ساتھ ایسا کیا جائے تا کہ اپنی مرضی کے مطابق استخارہ آ جائے تو کیسا ہے؟
جواب: : استخارہ کچھ سمجھ میں نہ آنے یا فیصلہ نہ کر پانے کی صورت میں رجاء کے قصد سے کیا جاتا ہے، وہ بھی فکر و مشورت کے بعد، لہذا اس صورت میں تکرار صحیح نہیں ہے مگر یہ کہ استخارہ کا موضوع بدل جائے یا اس کے لیے صدقہ دے دیا جائے۔
ایک نیا سوال بھیجنے کے لیے یہاں کلک کریں
العربية فارسی اردو English Azərbaycan Türkçe Français