مرجع عالی قدر اقای سید علی حسینی سیستانی کے دفتر کی رسمی سائٹ

سوال و جواب » آلات قمار

۱ سوال: ہمارے دوستوں میں بغیر شرط کے تاش کھیلنا معمول ہے کبھی کبھی دس بیس بار میں ایک بار شرط بھی لگا لیتے ہیں، حالانکہ میں شرط والی صورت میں ان کے ساتھ نہیں کھیلتا ہوں مگر اس ماحول میں تاش کھیلنا کیسا ہے؟
جواب: معیار عرف ہے، اگر آپ کے عرف میں تاش کا شمار جوۓ میں ہوتا ہے تو احتیاط واجب کی بناء پر شرط کے بغیر بھی کھیلنا جایز نہیں ہے۔
۲ سوال: آلات قمار سے بغیر شرط کے کھیلنا کیا حکم رکھتا ہے؟
جواب: شطرنج اور چوسر حرام ہیں، احتیاط واجب کی بناء پر ان کے علاوہ بھی جایز نہیں ہیں۔
۳ سوال: انعام کی خاطر یا شرط لگا کر فوٹبال وغیرہ کھیلنا کیا حکم رکھتا ہے؟
جواب: اگر اس میں پیسے کی شرط لگائی جائے تو حرام ہے لیکن اگر ان دونوں کے علاوہ کسی تیسرے کی طرف سے کوئی انعام رکھا گیا ہو تو کوئی حرج نہیں ہے۔
۴ سوال: کمپیوٹر پر تاش کھیلنے کا کیا حکم ہے؟
جواب: میعار عرف محل ہے، اگر آپ کے عرف میں جووا شمار کیا جاۓ تو بغیر شرط کے بھی۔ بنابر احتیاط واجب جایز نہیں ہے۔
۵ سوال: تاش کھیلنا کیسا ہے؟
جواب: احتیاط واجب کی بناء پر شرط کے بغیر بھی کھیلنا جایز نہیں ہے۔
۶ سوال: جووا شمار نہ ہونے کی صورت میں چوسر کھیلنے کا کیا حکم ہے؟
جواب: شرط کے بغیر جایز ہے۔
۷ سوال: بیلیارڈ کھیلنا کیسا ہے؟
جواب: اگر آپ کے عرف میں اس کا شمار جوئے میں ہوتا ہے تو احتیاط واجب کی بناء پر شرط کے بغیر بھی کھیلنا جایز نہیں ہے۔
ایک نیا سوال بھیجنے کے لیے یہاں کلک کریں
العربية فارسی اردو English Azərbaycan Türkçe Français